Ahsan Iqbal

بلدیاتی نمائندےلوگوں میں آگاہی مہم بھی چلا سکتےتھے۔پچھلے 8 سے 10 ماہ سے سب سے بڑے صوبے پنجاب میں حکومت نے بلدیاتی اداروں کو غیر آئینی طور پر برطرف کر دیا ہے۔گزشتہ 4 مہینے سے ہائی کورٹ میں انکا کیس زیر التوا ہے۔اگر ٹائیگر فورس بنانی ہےتو بلدیاتی اداروں کو بحال کریں۔جناب احسن اقبال

آج بھی میڈیا میں رپورٹس ہیں کہ فروری کے ابتدا میں بیوروکریٹک چینل سے حکومت کو خطرے سے آگاہ کر دیا گیا تھا آفیشل چینل نے احتیاطی تدابیر کا پورا روڈ میپ تجویز کیا تھا۔ فروری مارچ گزر گیا وفاقی حکومت گو مگو کی کیفیت میں ہے۔ جناب احسن اقبال کی شاہزیب خانزادہ کے پروگرام میں گفتگو

حکومت کے پاس کوئی ایکشن پلین نہیں کہ ٹائیگر فورس کی تربیت کیسے ہو گی۔ انکے لیے کیا حفاظتی اقدامات اٹھائے جائیں گے۔اس میں سول ڈیفینس کے ڈھانچے کو بروئے کار لایا جا سکتا ہے بجائے نئی ٹائیگر فورس کےجو تربیت یافتہ بھی نہیں ہے اور اسکے لیے کوئی حفاظتی اقدامات بھی نہیں۔جناب احسن اقبال

بہت سے شہروں قصبوں اور دیہاتوں میں ابھی بھی لوگ معمول کے مطابق زندگی گزار رہے ہیں۔ صرف بڑے شہروں کے محلوں میں لاک ڈاؤن نظر آتا ہے۔ حکومت لوگوں کو آگاہی دینے میں مکمل طور پر ناکام ہوئی ہے۔ اگر وزیراعظم کہے گا کہ گھبرانا نہیں ہے تو کوئی احتیاط کیوں کرے گا۔ جناب احسن اقبال

This is the strongest statistical association I've seen w/ respect to the virus. Wear a mask, mandate others to wear masks, & remember that @WHO is criminally incompetent. To repeat:@WHO is criminally incompetent.

PS-Don't get into elevators, buses, etc. unless your mask in N95 https://t.co/ZCkl3hql9K

Load More...